Featured Events


حاصل رمضان


عید الفطر مسلمانوں کے لیے خوشی کا دن ہے


 عید الفطر مسلمانوں کے لیے خوشی کا دن ہے جس میں اللہ کریم فرشتوں کو گواہ کر کے فرماتے ہیں کہ ہم نے روزے دار کو اس کی اجرت عطا فرمائی اور اس کی گزارشات،دعاؤں کو شرف قبولیت عطا فرمائی ہے۔ہمیں خود کو پرکھنے کی ضرورت ہے کہ جو رمضان المبارک کا حاصل تھا  پرہیز گاری  کیا اس کی کوئی کیفت رمضان المبارک کے بعد بھی ہمارے ساتھ ہے۔ امیر عبدالقدیر اعوان شیخ سلسلہ نقشبندیہ اویسیہ و سربراہ تنظیم الاخوان پاکستان کا جمعتہ المبارک کے موقع پر خطاب
  انہوں نے کہا کہ اللہ کریم نے بابرکت ماہ مبارک عطا فرمایا جو کہ تین عشروں پر مشتمل ہے جس میں رحم،بخشش اور دوزخ سے آزادی کا پروانہ عطا فرمایا جاتاہے۔جب ہم گناہوں اور غلطیوں کے ساتھ اس ماہ مبارک میں داخل ہوتے ہیں تو اس کی بھٹی میں بندہ مومن اپنی میل اتار کر اس ماہ مبارک کی تکمیل کرتا ہے پھر اس کے آخری عشرے میں لیلتہ القدر کے ساتھ جب اس ماہ مبارک کا اختتام ہوتا ہے تو دوزخ سے بریت کا پروانہ عطا ہوتا ہے۔اس کا عملی ثبوت ہمیں رمضان المبارک کے بعد اپنی عملی زندگی میں دیکھنے کی ضرورت ہے کہ کیا  اب میری زبان جھوٹ سے بچ رہی ہے، میری سماعت کسی کی برائی تو نہیں سن رہی،کیا میری روزی حلال اور طیب ہے اگر تو رمضا ن المبارک کے بعد بھی وہ حضورحق کی کیفیت موجود ہے تو رمضان گیا نہیں رمضان باقی ہے۔
  انہوں نے کورونا وبائی مرض کے متعلق بات کرتے ہوئے کہا کہ ہمیں احتیاط کرنی چاہیے اور اللہ کریم سے نجات کی دعائیں کرنی چاہیے۔اللہ کریم اس وبا سے نجات عطا فرمائے اور ہمارے وہ مظلوم بھائی بہن جو کشمیر اور فلسطین میں ظلم کا شکار ہیں اللہ کریم ان کی حفاظت فرمائیں۔آخر میں انہوں نے ملکی سلامتی اور بقا کی اجتماعی دعا فرمائی
Eid ul Fittar Musalmanoon ke liye khushi ka din hai - 1

قرآن مجید مشعل راہ


شان قدرت


نظام قدرت اور مصلحت


انسان کی تخلیق


لیلۃ القدر


رمضان المبارک کا تیسرا عشرہ جس میں بندہ مومن کو آگ سے بری ہونے کو عام فرما دیا۔


شب قدر وہ عظیم رات ہے جس میں کلام ذاتی (قرآن مجید) کے نزول کی ابتداء ہوئی اور اس رات کو اللہ نے اتنی برکت عطا فرمائی اس رات کو راتوں کی سردار رات کہا گیا۔اور آپ کی حسرت کے میری اُمت سابقہ اُمتوں کے مقابلے میں اتنی عبادت نہ کر پائے گی کیونکہ سابقہ اُمتوں کی عمریں بہت زیادہ تھیں۔تو اللہ کریم نے احسان فرمایاکہ لیلتہ القدر عطا فرمائی جس رات کی عبادت ہزار مہینوں سے بہتر ہے۔ امیر عبدالقدیر اعوان شیخ سلسلہ نقشبندیہ اویسیہ و سربراہ تنظیم الاخوان پاکستان کا جمعتہ الوداع کے موقع پر خطاب 
 انہوں نے کہا کہ بندہ مومن کو اگر یہ ادراک نصیب ہوجائے کہ زندگی کا ایک ایک لمحہ کتنا قیمتی ہے تو وہ غفلت سے نکل کر اپنے آپ کو متوجہ الی اللہ کر لے۔اور یہ احساس بندہ مومن میں تب پیداہوتا ہے جب اپنی زندگی کے معمولات میں ذکر الہی کو اولین ترجیح دے گا۔قرآن مجید میں ہر عبادت،نماز،جہاد،حج اور روزی کمانے کے حکم کے ساتھ ذکر الہی کا تاکیدی حکم فرما دیا ہے۔اب اس کو اختیار کرنے کے لیے جیسے تعلیمات نبوت کے لیے علماء کے پاس جانا پڑتا ہے اسی طرح اس شعبہ کے حاملین صوفیاء کی خدمت میں حاضر ہونا اتنا ہی ضروری ہے۔  رمضان المبارک کے روزے اللہ کی رضا کے لیے،راتوں کا قیام اس کی خوشنودی کے لیے اختیار کیا جائے  اور تیسرے عشرے میں یہ قیمتی رات  جس کی نشاندہی آپ ﷺ نے فرمائی کہ آخری عشرے کی طاق راتوں میں تلاش کیا جائے۔یہ محض پانچ راتیں ہیں جن میں ہم لیلتہ القدر کو پا سکتے ہیں۔لیکن افسوس اس بات کا ہے کہ ہم بے عملی اور انحطاط کا اس حد تک شکار ہو گئے ہیں کہ ان راتوں کو بھی رواجات کی نذر کر دیتے ہیں جو کہ ہم سب کے لیے ایک بہت بڑا لمحہ فکریہ ہے۔آئیں ہم اپنے آپ کو اللہ کے حضور پیش کر دیں اور اس طرح کی محبت کی جھلک ہم میں بھی نظر آئے کہ اگر نہاں خانہ دل میں کہیں کوئی شیطنت ہے تو اس رات کی برکت سے دھل جائے اور اللہ کریم سے جہاں اپنی اور اپنے اہل و عیال کی بخشش طلب کی جائے وہاں اس کورونا بیماری سے نجات کے لیے بھی دعا کی جائے۔
Ramadaan ul mubarak ka teesra ashra jis mein bandah momin ko aag se buri honay ko aam farma diya  - 1
Ramadaan ul mubarak ka teesra ashra jis mein bandah momin ko aag se buri honay ko aam farma diya  - 2

کفرو شرک کا انجام


سلامتی والا گھر