Latest Press Releases


حضرت محمد ﷺ خاتم النبین ہیں


حضرت محمد ﷺ خاتم النبین ہیں اور احکامات کی تکمیل آپ نے فرمائی اور روز محشر انبیاء ؑ کی سچائی کی گواہی بھی دیں گے۔اور اُمت محمدالرسول اللہ ﷺ کی شفاعت بھی فرمائیں گے۔ ہم دیکھیں کہ ہم نے اپنے آپ کو ظاہر و باطن میں کتنا دین اسلام کے مطابق ڈھالا ہوا ہے۔ان خیالات کا اظہا ر امیر عبدالقدیر اعوان شیخ سلسلہ نقشبندیہ اویسیہ و سربراہ تنظیم الاخوان پاکستان نے جلسہ بعثت رحمت عالم ﷺ کے موقع پرخواتین و حضرات کے بہت بڑے اجتماع سے دارالعرفا ن منارہ میں خطاب کرتے ہوئے کیا۔
 انہوں نے کہا کہ نبی کریم ﷺ کا ارشا ہے کہ آخر زمانہ میں غزوۃ الہند بپا ہوگا اور اس میں شریک لوگ بلاحساب جنت جائیں گے۔مجھ سمیت ہر مسلمان کو اللہ کریم یہ توفیق عطا فرمائیں کہ ہم اس میں شامل ہوں اور ہم اپنے اعمال ایسے اختیار کریں جو کہ اتباع رسالت ﷺ کے مطابق ہوں۔
  انہوں نے مزید کہا کہ قرآن مجید میں اللہ کریم کا ارشاد ہے کہ اللہ کا ذکر کثرت سے کریں لسانی ذکر،عملی ذکر سے ذکر کثیر کا حق ادا نہیں ہوتا جب تک ہم اپنے ہر سانس کو دل کی ہر دھڑکن کو اللہ کے نام سے مزین نہ کریں جب یہ بنیاد مضبوط ہو گی تو ان شاء اللہ دین و دنیا میں راحت کا سبب ہوگا۔مشکلات اور دنیاوی مصائب کے حل کے لیے ذکر اللہ نہ اختیار کیا جائے بلکہ صرف اور صرف اللہ کی رضا کے حصول کے لیے ذکر اختیار کیا جائے۔ اپنی توقعات کا محور صرف اللہ کریم کو رکھیں۔جب ہم خالص نیت سے یہ عمل اختیار کریں گے تو پھر اس کی رحمت کا نزول بھی ہو گا جو بندہ کو اندھیرے سے نکال کر روشنی کی طرف لے آئے گا۔پھر نور کی روشنی کی سمجھ آئے گی۔اور یہی وہ ہتھیار ہے جس سے دین اسلام پر استقامت نصیب ہوتی ہے۔روز محشر سلامتی کا سبب ہو گا۔
  یاد رہے کہ سلسلہ نقشبندیہ اویسیہ کے تحت پورے ملک میں جلسوں کا انعقاد کیا گیا ہے جس میں،میانی بھیرہ،اوبسیشن مارکی اسلام آباد،ملتان،ڈی آئی خان،کوٹلی آزاد کشمیر،او جی ڈی سی ایل اسلام آباد،بلیو ورلڈ سٹی اسلام آباد اور اب مرکز دارالعرفان منارہ میں ہوا اس کے علاوہ 15 نومبر کو فیصل آباد میں بھی جلسہ بعثت منعقد ہو گا۔آخر میں حضرت امیر عبدالقدیر اعوان مد ظلہ العالی نے اجتماعی دعا فرمائی۔
hazrat Mohammad SAW Khatim-ul- Anbiya hain - 1

نبی کریم ﷺ کی شان میں گستاخی ہماری کمزوریوں اور بد اعمالیوں کا نتیجہ ہے


 یہ ہماری کمزوریوں کا نتیجہ ہے کہ ملعون کو جرات ہوئی کہ آپ ﷺ کی شان میں گستاخی کر سکے۔ہمیں وہ غیرت ایمانی درکار ہے جو اُن مسلمان حکمرانوں کو حاصل تھی جو دنیائے کفر کی آنکھوں میں آنکھیں ڈال کر بات کرتے تھے۔اس وقت بحیثیت مجموعی اسلام عدم تحفظ کا شکار ہے ہم تو وہ قوم ہیں جو دوسروں کو بھی تحفظ دینے والے ہیں۔ان خیالات کا اظہار امیر عبدالقدیر اعوان شیخ سلسلہ نقشبندیہ اویسیہ و سربراہ تنظیم الاخوان پاکستان نے بلیو ورلڈ سٹی ھاؤسنگ سوسائٹی اسلام آبا د میں منعقد ہونے والی محفل عشق رسول ﷺمیں ہزاروں کی تعداد میں آئے ہوئے عاشقان رسول ﷺ سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔
  انہوں نے اس سوسائٹی میں ایک بہت بڑی مسجد کی بنیاد بھی رکھی اور خصوصی دعا بھی فرمائی۔سوسائٹی پر بات کرتے ہوئے آپ نے کہا کہ آپ لوگ دو فریق ہیں میری دعا ہے کہ آپ اسی طرح ایک دوسرے کا اعتماد بحال رکھتے ہوئے اس سوسائٹی کو آگے لے کر جائیں گے۔اس تقریب میں چوہدری سعد نزیر چئیر مین بلیو ورلڈ سٹی کے علاوہ  جناب ندیم اعجاز،نعیم اعجاز،سرفراز گوندل،ارشد اعوان ناصر گوندل اور سردار ایاز صادق کے علاوہ مختلف شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والے لوگوں نے بڑی تعداد میں شرکت کی
Nabi kareem SAW ki shaan mein gustaakhi hamari kamzoriyon aur bad aamalyon ka nateeja hai - 1

تقاضہ محبت یہ ہے کہ بندہ مومن اپنے محبوب کے ہر اشارے پر جان نچھاور کرنے کو تیار رہے


 دعویٰ عشقِ مصطفے ﷺ کی شہادت ہمارے اعمال دیں۔اور تقاضہ محبت ہی یہ ہے کہ بندہ مومن اپنے محبوب کے ہر اشارے پر جان نچھاور کرنے کو تیار رہے۔معاشرے میں باہم تفریق کو دور کرتے ہوئے آپس میں محبت و الفت و یگانگت کو فروغ دیا جائے۔ان خیالات کا اظہار امیر عبدالقدیر اعوان شیخ سلسلہ نقشبندیہ اویسیہ و سربراہ تنظیم الاخوان پاکستان نے او جی ڈی سی ایل ھیڈ آفس اسلام آباد کے ایڈیٹوریم میں خطاب کرتے ہوئے کیا۔
  انہوں نے مزید کہا کہ دین اسلام کو رسم و رواجات کی نزر کرنے کی بجائے ان طریقوں کو اپنایا جائے جو آپ ﷺ نے ارشاد فرمائے۔ولادت باسعادت کے موقع پر اظہار محبت میں وہ اظہار اپنا یا جائے جس سے اتباع محمد الرسول اللہ ﷺ ہو،یہ نہ ہو کہ اظہار محبت میں محافل کا انعقاد ہو رہا ہو لیکن فرض نماز چھوٹ رہی ہو۔محفل سے اُٹھ کر جب بندہ معمولات زندگی میں جائے تو حلال حرام کا خیال رکھے،
  اس تقریب میلا د النبی ﷺ کا انعقاد میلاد کمیٹی اوجی ڈی سی ایل نے کیا۔اس تقریب میں بطور مہمان خصوصی حضرت جی کو مد عو کیا گیا اور اس تقریب میں جناب شاہد سلیم خان صاحب ایم ڈی او جی ڈی سی ایل،جناب شہزاد صفدر صاحب ایڈمن،جنرل مینجر،مینجرز،آفیسرز سٹاف اور میلاد کمیٹی کے علاوہ بہت سے لوگوں نے شرکت کی۔آخرمیں انہوں نے ملکی سلامتی اور بقا کی اجتماعی دعا فرمائی
taqaza mohabbat yeh hai ke bandah momin –apne mehboob ke har isharay par jaan nichhawar karne ko tayyar rahay - 1

آپ ﷺ کی بعثت اُمت مسلمہ پر اللہ کریم کا بہت بڑا احسان ہے


 اُمت مسلمہ کے زوال کا سبب وہ راہ ہے جو عروج کی تھی اُسے ہم نے چھوڑ دیا۔تجدید عہد کرتے ہوئے معافی کے طلب گار ہو کر اگلی زندگی اسوہ حسنہ  ﷺ کے مطابق گزاری جائے۔امیر عبدالقدیر اعوان
  ہماری سانسو ں کی روانی ہے اور آپ ﷺ کی شان میں گستاخیاں ہورہی ہیں یہ ہماری کمزوریاں اور ہمارے ایمان کی کمی دنیا ئے کفر کو جرات دے رہی ہے حالانکہ اگر ہم قول و فعل میں مضبوط ہوں تو پھر غیرت ایمانی کی للکار کسی کو اجازت نہ دے گی کہ وہ آپ ﷺ کی شان میں گستاخی کرے اور کشمیر پر انڈیا کا لاک ڈاؤن سال سے زیادہ عرصہ ہو گیا ہے ہم ان سے اظہار ہمدردی کرتے ہیں۔ان خیالا ت کا اظہار امیر عبدالقدیر اعوان شیخ سلسلہ نقشبندیہ اویسیہ و سربراہ تنظیم الاخوان پاکستان نے سگنیچر مارکی کوٹلی آزاد کشمیر میں ہزاروں افراد سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔
  انہوں نے کہا کہ آپ ﷺ کی بعثت اُمت مسلمہ پر اللہ کریم کا بہت بڑا احسان ہے کہ آپ ﷺ کی بعثت نے بندہ مومن کی زندگی کے ہر پہلو کی راہنمائی فرمائی۔ضرورت اس امر کی ہے کہ ہم زندگی کے ہر شعبے میں اپنی مرضی کرنے کی بجائے اسوہ رسول ﷺ پر عمل پیرا ہوں۔کیفیات قلبی اور برکات نبوت کی اہمیت پر زور دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ اللہ کریم قرآن کریم میں فرماتے ہیں تو میرا ذکر کر میں تیر ا ذکر کروں گا۔اللہ کی یاد قرب الٰہی کا سبب ہے۔اور اس کی نیت خالص ہو جائے گی جو عمل کرے گا اللہ کی رضا کے لیے ہوگا۔
  آخر میں حاضرین میں نئے احباب جنہوں نے بیعت کرنی تھی انہیں بیعت سے سرفرا ز فرمایا اور ذکر قلبی کا طریقہ بتایا۔اللہ کی یاد اللہ کے روبرو کر دیتی ہے جس سے بندے کی پسند اللہ کی پسند میں ڈھل جاتی ہے۔یاد رہے کہ یہ پروگرام سلسلہ عالیہ کا پانچواں پروگرام ہے جو کہ بعثت رحمت عالم کے موضوع پر منعقد ہوا اور کوٹلی کی اہم شخصیات نے گزشتہ رات امیر عبدالقدیر اعوان سے ملاقات کی ان میں ڈی سی عمر اعظم صاحب،ایس پی راجہ اکمل،ایس ڈی ایم راجہ طارق،اے ایس پی خرم اقبال،پی ڈی ایس پی راجہ گلزار،سابق سیکرٹری محمود الحسن،ڈاکٹر سید شمس محی الدین،خورشید احمد قادری ایڈووکیٹ،لیاقت مغل ایڈووکیٹ،محمود الحسن جماعت اسلامی،راجہ نجیب ایڈووکیٹ،اے ڈی بھٹی صاحب،سپیشل ونگ،ڈی ایچ او ڈاکٹر نصراللہ،ڈاکٹر نزیر ملک  اور راجہ مہتاب کے علاوہ دیگر افراد شامل تھے۔
  آخر میں انہوں نے ملکی سلامتی اور بقا کی اجتماعی دعا فرمائی۔
Aap SAW ki baissat Ummat Musalmah par Allah kareem ka bohat bara ahsaan hai - 1

اپنے کردار کی اصلاح کرتے ہوئے معاشرے میں مثبت تبدیلی کی کوشش کریں


 اسلامی معاشرہ اس وقت انحطاط کا شکار ہے ہم نے اُن باتوں کو جو کہ فروعی اختلاف ہیں جن میں کسی ایک پر عمل ہو جائے تو درست ہے ہم اسے اختلاف اور جھگڑوں کی صورت میں لے آئے ہیں۔حالانکہ اظہار محبت رسول ﷺ تو بندہ مومن کو یہ درس دیتا ہے کہ اپنے بھائی کے لیے اپنی جان نچھاور کر دی جائے۔جب ہم رواجات کو فروغ دیں گے اور لا دینی ہو گی تو پھر معاشرے میں بد نظمی ہو گی۔ان خیالات کا اظہار امیر عبدالقدیر اعوان شیخ سلسلہ نقشبندیہ اویسیہ و سربراہ تنظیم الاخوان پاکستان نے مارگلہ مارکی ڈیرہ اسماعیل میں جلسہ بعثت رحمت عالم ﷺ کے موقع پر بہت بڑے خوااتین و حضرات کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔
  انہوں نے کہا کہ اسلا م ایسا دین ہے جو کہ بندہ مومن کی سونے جاگنے اور زندگی کے ہر شعبے میں راہنمائی کرتا ہے کہ وہ کیا کرے کن اعمال سے بچے اور یا د رکھیں اللہ کریم ہمارے مالک ہیں اور وہ بہتر جانتے ہیں کہ انسان کے لیے کیا چیز بہتر ہے آج ہم نے فرائض کو چھوڑ رکھا ہے حلال حرام کی تمیز ہم سے اُٹھتی جا رہی ہے اخلاقیات میں ہم پستی کا شکار ہیں ان سب مسائل کا حل اس بات میں مضمر ہے کہ ہم ایمان کو مضبوط کریں ہر عمل کو دین اسلام کے مطابق کریں تو پھر بات اپنی ذات سے نکل جائے گی۔ایمان وہ دولت ہے جو زندگی میں ٹھراؤ اور سکھ عطا فرماتا ہے۔
  انہوں نے مزید کہا کہ ملک کے تمام ادارے اور اس کے افراد ہم میں سے ہیں ہمارے ہر خاندان کے لوگ ملک کے لیے اپنی جانوں کے نزرانے پیش کر رہے ہیں اس لیے اس کے تحفظ کے لیے ہم سب یک جان ہیں اپنے کردار کی اصلاح کرتے ہوئے معاشرے میں مثبت تبدیلی کی کوشش کریں نتائج اللہ کریم پر چھوڑ دیں اللہ کریم ہر ایک کے عمل کو قبول فرمائیں۔ہر حکم کو سنتے وقت اپنے آپ کو اس کے سامنے رکھیں اور اظہار محبت کو ماہ سال اور مخصوص دنوں میں مقید کرنے کی بجائے اس کا اظہار سال کے ہرلمحے میں اپنی ہر سانس میں ہونا چاہیے۔آخر میں ذکر قلبی کا طریقہ بتایا اور تمام خواتین و حضرات کو ذکر قلبی بھی کرایا۔یاد رہے کہ یہ چوتھا جلسہ سلسلہ نقشبندیہ اویسیہ کے تحت ڈیرہ اسماعیل خاں میں ہوا۔جس کا آغاز تلاوت کلام پاک کے لیے قاری لطیف صاحب،نعتیہ کلام محمد طارق نے پیش کیا اور حضرت جی مد ظلہ العالی کا تعارف صاحب مجاز سلسلہ عالی یار محمد صاحب نے پیش کیا۔اس کے علاوہ علاقہ بھر سے بہت بڑی علماء کرام کی تعداد نے بھی شرکت کی
Apne kirdaar ki islaah karte hue muashray mein musbet tabdeeli ki koshish karenn - 1

مسلمان،مخلوق میں سکھ اورآسانی کا سبب بنتا ہے


  اللہ کریم ہمیں بھی اس راہ کا مسافر بنائے جس میں آپ ﷺ نے غزوہ ہند میں شریک ہونے والوں کی بلا حساب جنت میں داخلے کی بشارت دی ہے ۔امیر عبدالقدیر اعوان
حضرت محمد ﷺ کی ذات مبارکہ ہم سب کو اپنی جان سے پیاری ہے ایک ادنی سے ادنی مسلمان بھی آپ ﷺ کے لیے جان نچھاور کر سکتا ہے خالی مذمت سے یہ حق ادا نہ ہوگا۔یہاں عملی طور پر قدم اُٹھانے کی ضرورت ہے اپنے ہر عمل کو سنت نبوی میں ڈھالنے کی ضرورت ہے۔پشاور میں مدرسہ کے معصوم بچوں کے خون کا کون جواب دے گا۔ان شہادتوں کا ذمہ دار کون ہے۔قرآن کریم کی تلاوت کرتے بچوں پر اتنا بڑا ظلم ہوا یہ واقع ہم سب کے لیے بڑے سوال چھوڑ گیا۔اس کی تحقیقات کو جلد از جلد مکمل کر کے مجرموں کو قرار واقع سزا دی جائے۔ان خیالات کااظہارامیر عبدالقدیر اعوان شیخ سلسلہ نقشبندیہ اویسیہ و سربراہ تنظیم الاخوان پاکستان نے بعثت رحمت عالم ﷺ کانفرنس راجستھان میرج ہال ملتان میں ہزاروں مرد و خواتین سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ 
  انہوں نے کہا کہ ماہ مبارک ربیع الاول با برکت مہنہ ہے اس ماہ مبارک میں ہم عہد کریں کہ عشق مصطفے کو عملی طور پر اپنائیں اور تمام عبادات اپنے اللہ کے لیے کریں اور ایک دعوت عام یہاں سے دے رہا ہوں کہ اپنے قلوب کو برکات محمد ﷺ سے مزین کرنے کے لیے مرکز دارالعرفان منارہ آئیں ان شاء اللہ ایک ایک بندے پر محنت کرتے ہوئے اُسے ذکر قلبی کرایا جائے گا۔
  یاد رکھیں مسلمان،مخلوق میں سکھ اورآسانی کا سبب بنتا ہے قرآن و سنت میں کوئی شبہ کی گنجائش نہیں ہمیں چاہیے کہ اپنے کردار کو جانچیں اور تمام محفل کو ذکر قلبی کا طریقہ بتاتے ہوئے پہلہ لطیفہ قلب کرنے کی اجازت عام فرمائی اور اللہ کے فضل سے کیفیات قلبی کا بحر جاری ہوگا زندگی سے برذخ میں اترے تو آپ ﷺ کی حضوری نصیب ہوگی۔
  یاد رہے کہ اس عظیم الشان پروگرام کا آغاز تلاوت قرآن پاک سے ہوا اور حضرت جی رحمۃ اللہ علیہ کا نعتیہ کلام محمد شیراز اور محمد فیضان نے پیش کیا۔سٹیج سیکرٹری کے فرائض ڈاکٹر نصرت پاشا صاحب مجاز سلسلہ عالیہ نے انجام دئیے ۔ دیگر مقررین میں اظہر خورشید ڈویژنل صدر فیصل آباد کے علاوہ علاقہ کے لوگوں نے بڑی تعداد میں شرکت کی۔
Musalman, Makhlooq mein sukh avr aasani ka sabab bantaa hai - 1

صحابہ کرام ؓ نے اپنے محبوب ﷺ سے محبت اور عشق کے دعوے کو ایسے ثابت کیاکہ آپ ﷺ کے بعد بہترین زمانہ قرار پایا


 صحابہ کرام ؓ نے اپنے محبوب ﷺ سے محبت اور عشق کے دعوے کو ایسے ثابت کیاکہ آپ ﷺ کے بعد بہترین زمانہ قرار پایا ہمارے لیے راہنمائی ہے ہم اظہار محبت میں حدودوقیود کو مد نظر رکھیں اور باہم تفریق کی بجائے محبت و الفت اور بھائی چارے کو فروغ دیں۔ان خیالات کااظہار شیخ سلسلہ نقشبندیہ اویسیہ و سربراہ تنظیم الاخوان پاکستان امیر عبدالقدیر اعوان نے اوبسیشن مارکی اسلام آباد میں بعثت رحمت عالم ﷺ سیمینار کے موقع پر بہت بڑے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔
  انہوں نے مزید کہا کہ دین کو پڑھا جائے سیکھا جائے کیونکہ جب تک دین کوسمجھا اور سیکھا نہ جائے گا تو عمل کرنا ممکن نہ ہو گا۔نئی نسل کی تربیت ہم نے کرنی ہے اگر ہم نے اپنے بچوں اور نوجوانوں کو موجودہ قدریں،اخلاقیات اور باطنی علوم سے بہرہ مند کیا تو ہی ممکن ہو گا کہ وہ بڑے چھوٹوں کی تمیز کریں گے۔پاکستان ہمارا گھر ہے۔سلسلہ نقشبندیہ اویسیہ میں ہر قوم اور ہر خطے سے تعلق رکھنے والے لوگ موجود ہیں اور ہم سب کو تہہ دل سے یہ احساس کہ اس کی بنیادوں میں ہمارے بزرگوں کا خون لگا ہے ہماری ماؤ ں بیٹیوں کی عزتیں لگیں ہیں۔ہم سب ان شاء اللہ اس کے محافظ ہیں اور اس کے ایک ایک ذرے پر اپنی جان کی قربانی دینے کو تیار ہیں۔اور بات جب ملک پاکستان کی آئے گی تو ہم ایک جان ہو کر اس کی حفاظت کریں گے۔اور جب ملک پاکستان کی بات کرتے ہیں تو پھر اس کے ہر ادارے کی بات آئے گی کسی کو بھی اس کی جرات نہیں کرنی چاہیے کہ ان کو کمزور کرنے کی کوشش کریں وطن عزیزقیمتی ہے یہ ملک ہمیشہ قائم رہے گا۔اور اس سے اسلام کی شناسائی کا سبب بنے گا۔
  آخر میں ذکر قلبی کی اہمیت پر زور دیتے ہوئے کہا کہ قلب کو اللہ اللہ کی ضربوں سے صاف کیا جائے تا کہ دل اچھے اور برے کی تمیز کر سکے۔اور اس میں اس کو اپنا اصل نظر آنا شروع ہو جائے گا۔طریقہ ذکر بتایا کہ سانس اندر جائے تو لفظ اللہ دل کی گہرائیوں میں اترے اور باہر نکلے تو ھو کی چوٹ دل پر لگے۔یادرہے کہ اس عظیم الشان پروگرام میں تمام کرسیاں پر ہونے کے بعد بھی حاضرین محفل نے اپنے محبوب شیخ کا بیان نیچے بیٹھ کے سنا اور تل دھرنے کی جگہ بھی نہ رہی
Sahaba karaam Ra ne –apne mehboob SAW se mohabbat aur ishhq ke daaway ko aisay saabit kia keh aap SAW ke baad behtareen zamana qarar paaya - 1

شرح صدر مزید عمل صالح اختیار کرنے کی طرف لے جاتا ہے جس سے اپنی ذات کی نفی ہوتی ہے۔


وطن عزیز میں نظام عدل ایسا ہے جو مظلوم کو انصاف دینے کی بجائے مزید پریشانی اور مصیبت میں دھکیل رہا ہے۔حالانکہ اسلام ہمیشہ مظلوم کے ساتھ کھڑا ہونے کی تعلیم دیتا ہے اور ظالم کے ہاتھ روکنے کاحکم دیتا ہے۔ان خیالات کا اظہار امیر عبدالقدیر اعوان شیخ سلسلہ نقشبندیہ اویسیہ  و سربراہ تنظیم الاخوان پاکستان نے جمعتہ المبارک کے موقع پر خطاب کرتے ہوئے کیا۔
  انہوں نے کہا کہ جہاں باقی تمام نظام آزمائے جا رہے ہیں جن میں کچھ عرصہ بعد تبدیلی کی ضرورت پیش آجاتی ہے لیکن وہ نظام جو کہ آفاقی ہے اُسے عمل میں لانے کی سعی نہیں کی جارہی یہ کام کسی فرد واحد کا نہیں ہے بلکہ ہمارے منتخب شدہ حکمرانوں کی ذمہ داری ہے کہ اسلام کے سنہری اصولوں کو نافذ کریں۔
  انہوں نے مزید کہا کہ ماہ مبارک ربیع الاول میں عشق مصطفے ﷺ کے دعوے کیے جاتے ہیں مختلف جلسوں اور پروگراموں کا انعقاد ہوتا ہے اگر ہمارا عمل آپ ﷺ کے بتائے ہوئے اصولوں کے خلاف ہے سنت کی پرواہ نہ کی جا رہی ہو تو پھر اس محبت اور عقیدت کو آپ کیا کہیں گے۔اگر ہم صرف اپنی زندگی کو اسلام کے مطابق کر لیں تو کسی نعرے کی ضرورت نہیں پڑے گی بلکہ ہمارا ایک ایک قدم خود عشق مصطفے کی گواہی دے گا۔ آخر میں انہوں نے ملکی سلامتی اور بقا کی اجتماعی دعا فرمائی۔
Sharah saddar mazeed amal Saleh ikhtiyar karne ki taraf le jata hai jis se apni zaat ki nifi hoti hai  - 1

اظہار محبت میں بھی حدود وقیو د کا خیال رکھا جائے اور ایسی کوئی حرکت نہ ہو جائے جو بے ادبی میں شمار ہو


 آپ ﷺ کی ولادت با سعادت ماہ ربیع الاول میں ہوئی اور چالیس سال کے بعد آپ ﷺ کی بعثت ہوئی اور احکامات کا نزول ہو ا۔اور یہ رشتہ مومنین کے لیے خاص ہے۔عشق مصطفے ﷺ کو عملی طور پر اپنائیں۔ہر عمل کو اسوہ رسول ﷺ کے مطابق ڈھال لیں محافل کا انعقاد ضرور کریں اور ان میں باوضو حاضر ہوں  اور درود شریف کثرت سے پڑھیں۔ان خیالات کا اظہار امیر عبدالقدیر اعوان شیخ سلسلہ نقشبندیہ اویسیہ و سربراہ تنظیم الاخوان پاکستان نے جلسہ بعثت رحمت عالم و عشق مصطفے ﷺ میانی بھیرہ کے موقع پر سالکین کی بہت بڑی تعداد سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔
  انہوں نے کہا کہ ہر بندے کا کیا گیا عمل معاشرے میں اچھائی یا برائی کا سبب بنتا ہے اور اگر معاشرے میں فساد ہے تو یہ بھی ہمارے اعمال کا نتیجہ ہے۔دوسری جانب حکمران جو ہمارے اوپر حکومت کر رہے ہیں احکام الہی اور آپ ﷺ کے تمام اصولوں کو خود اپنائیں قوانین کو بھی اسلامی کریں اور ملک کا ہر بندہ اس ملک کا ایک حصہ اور اکائی ہے اور اس وطن عزیز کی تعمیر میں ہمارے اجداد کاخون لگا ہے۔ہر ایک اپنے اوپر نفاذ اسلام کرے اور ان شاء اللہ اس طرح وطن عزیز میں اسلام کی بہاریں آئیں گی۔
اس پروگرام کا آغاز تلاوت قرآن مجید سے ہوا جو کہ قاری عبدالمنان صاحب نے کی ان کے بعدنعت شریف کے لیے مبشر حسن کو بلایا گیا جنہوں نے محفل پر رقعت طاری کر دی۔جلسہ میں علاقہ کے مختلف شعبہ ہائے زندگی کے لوگوں کی بڑی تعدا د نے شرکت کی۔جن میں پیر شمیم شاہ صاحب سجادہ نشین دربار عالیہ کلس شریف،پیر راشد شمیم شاہ صاحب،ڈاکٹر ملک مختار احمد برتھ ایم این اے،ملک صہیب احمد برتھ ایم پی اے،چوہدری گلزار احمد صدر انجمن تاجران میانی،چوہدری عبدالرشید صاحب چئیر مین میانی سٹی،سیکرٹری انفارمیشن الاخوان پاکستان امجد محمود اعوان،جنرل سیکرٹری تنظیم الاخوان پاکستان حکیم عبدالماجد اعوان،صدر الاخوان سرگودھا ڈویژن عمر مختار چیمہ،صاحب مجاز مہر گل و دیگر معززین علاقہ نے بھی شرکت کی۔
آخر میں ذکر قلبی اور کیفیات محمد الرسول اللہ ﷺ کی اہمیت پر زور دیتے ہوئے فرمایا کہ اب بھی یہ بحر موجود ہے بس ہم اس کی جستجو پیدا کریں۔اور دل جسے قلب کہتے ہیں اس پر اللہ اللہ کی ضربیں لگائی جائیں تو قلب کی اصلاح ہوگی۔ہمارے اندر وہ تبدیلی آئے گی جس سے گناہ کڑوا لگنے شروع ہو جائیں گے اور نیکی کرنے کو دل کرتا ہے۔ بعد میں تمام حاضرین کو کچھ دیر کے لیے ذکر کرایا اور دعا کرائی۔یاد رہے کہ حضرت جی کے استقبال میں جناب مختار احمد برتھ نے کہا کہ آپ ہمارے علاقے میں تشریف لائے یہ ہمارے لیے بڑے فخر کی بات ہے اور ہم شکر گزار ہیں کہ آپ جیسی ہستیاں ہماری تربیت فرما رہی ہیں
Izhaar mohabbat mein bhi hudood-o-Qayood ka khayaal rakha jaye aur aisi koi harkat nah ho jaye jo be adbi mein shumaar ho - 1

قرآن کریم حیات کی کتا ب ہے


قرآن کریم ہمارے لیے حیات کی کتاب ہے۔جسے ہم نے ریشمی غلافوں میں سجا کر رکھ دیاہے یا موت کے وقت کسی کے سرہانے سورہ یس پڑھ لی تا کہ مرنے والے کی موت آسان ہو جائے۔اللہ کریم کا احسان عظیم ہے جس نے ہمیں اپنے ذاتی کلام سے نوازاتا کہ زندگی کے ہر پہلو میں ہم راہنمائی حاصل کر سکیں۔اس کے برعکس جب ہم اپنی عقل و دانش کا استعمال کرتے ہوئے عمل کرتے ہیں تو پھر ہم سیدھے راستے سے بھٹک جاتے ہیں۔ان خیالات کا اظہار امیر عبدالقدیر اعوان شیخ سلسلہ نقشبندیہ اویسیہ و سربراہ تنظیم الاخوان پاکستان نے جمعتہ المبارک کے موقع پر خطاب کرتے ہوئے کیا۔
  انہوں نے کہا کہ زندگی کی اس فرصت کو غنیمت جانتے ہوئے صالح اعمال اختیار کرنے چاہیے اگر ہم اپنے آپ کو سیدھی راہ پر چلا لیں تو موت کی سختی سے ڈرنے کی بجائے بندہ مومن موت کو اللہ کریم سے ملاقات کا سبب سمجھتا ہے۔اور خود کو حق کی راہ کامسافر گردانتا ہے۔دین اسلام کی تعلیمات بندے کو معاشرے میں رہنے کا سلیقہ سکھاتی ہیں بندہ مومن سے معاشرے میں ہمیشہ خیر ہی ہوتی ہے۔عین جنگ میں بھی فصل تباہ کرنے سے منع فرمایا گیا ہے،پانی کے ضیا ع پر قید لگا دی غرض کے زندگی کے ہر پہلو میں راہنمائی عطا فرمائی جو عین انسانی فطرت کے مطابق ہے۔اور صدیا ں گواہ ہیں کہ ارشادات محمد الرسول اللہ ﷺ آج بھی ویسے ہی نتائج دے رہے ہیں جیسے صدیاں پہلے تھے۔ ہم اپنی پسند پر اپنی انا میں آکے یا تکبر میں خود سے فیصلے کریں گے تو نتائج بھی پھر ویسے ہی آئیں گے انسان کے ہر کام میں ہر وقت بہتری کی گنجائش باقی رہتی ہے۔جب کہ اللہ کریم کے قوانین فطرتی ہیں جو قیامت تک قابل عمل بھی ہیں اور سہل بھی۔
  یاد رہے کہ راوں ماہ  ولادت باسعادت کے حوالے سے بعثت رحمت عالم ﷺ کے موضوع پرملک کے طول وعرض میں جلسے اور سیمینار منعقد ہو رہے ہیں جس میں پہلہ جلسہ 21 اکتوبر میانی سرگو دھا میں، 25 اکتوبر راولپنڈی،26 اکتوبر اسلام آباد،29 اکتوبر ملتان ،30 اکتوبر ڈیرہ نور ربانی کھر،31 اکتوبر ڈی آئی خاں،4 نومبرکوٹلی کشمیر،8 نومبر مرکز دارالعرفان منارہ اور 15 نومبر کو فیصل آباد میں ہو گا۔
 ان تمام پروگرامز میں شیخ المکرم حضرت امیر عبدالقدیر اعوان مد ظلہ العالی خصوصی خطاب فرمائیں گے جو کہ سلسلہ عالیہ کے فیس بک آفیشل پیج اور یوٹیو ب آفیشل چینل پر براہ راست دکھائیں جائیں گے۔

Quran Kareem Hayaat ki Kitaab hai - 1